We use cookies to provide some features and experiences in QOSHE

More information  .  Close
Aa Aa Aa
- A +

عوام اب ’’ سر‘‘ اُٹھانے کو ہے ؟

2 0 0
18.01.2019

پاکستانی عوام گذشتہ کچھ مہینوں سے تذبذب کا شکار ہیں ، ہر دِن کا سورج اُن کے لئے مشکلات اور تکالیف کا پیغام لے کر طلوع ہو رہا ہے ،حکومتی اداروں سے لے کر حکومتی نمائندوں تک غریب عوام پر ٹیکسوں اور مہنگائی کا بوجھ بڑھاتے جا رہے ہیں ۔پاکستانی عوام پر ہر روز بڑھایا جانے والا بوجھ دیکھ کر ایک پاکستانی فلم کا ڈائیلاگ یاد آ گیا ، فلم میں ایک ’’ کاما ‘‘ اپنے مالک سے کہتا ہے ’’ غلام تے ایناں بوجھ نئیں پائی دا ، اے نہ ہووے پئی او اپنا بوجھ لا کہ تے سر چُک لئے (ملازم پر اتنا بوجھ نہ ڈالیں کہ وہ بوجھ برداشت نہ کرتے ہوئے اُسے اُتار پھینکے اور اپنا سر اُٹھا لے )۔

ہر حقیقت چونکہ پہلے ایک خیال ہی ہوتا ہے اسی لئے ڈر لگتا ہے کہ کہیں پاکستانی عوام اپنی گردن کا ٹوٹنے والا ’’ منکا ‘‘ بچانے کے لئے اپنے اُوپر برداشت سے زیادہ ڈالا گیابوجھ اُتار پھینکے اور اپنا سر نہ اُٹھا لے ۔عوام جب سر اُٹھائے گی توحکومت کی جانب سے خواہ اِس عمل کو قانون شکنی یا کچھ بھی کہہ کر قانونی ادارے حرکت میں لائے جائیں گے اور عوام سے لڑائی ہوگی ، بہر اس طرح کی صورت حال کو خانہ جنگی کی جانب جانے والا ایک راستہ ہی کہا جاسکتا ہے ۔

ویسے دیکھا جائے تو پاکستان میں ایک طرح سے علامتی خانہ جنگی شروع ہو چکی ہے ، غریب عوام ہر روز حکومتی اداروں کی طرف سے کی جانے والی مہنگائی کے ساتھ لڑ رہے ہیں ۔عوام بیچارے صبح چڑیوں کی چہچہاہٹ کے ساتھ اپنے شکوے اور گلوں کا راگ الاپتے ہوئے روزگار کی تلاش میں نکلتے ہیں ،اسی کشمکش میں کبھی ای چالان ، ہیلمٹ نہ پہنننے پر جرمانہ ، موٹر سائیکل پر تین افراد کا........

© Daily Pakistan (Urdu)